|

وقتِ اشاعت :   January 31 – 2014

لندن: متحدہ قومی موومنٹ کے قائد الطاف حسین نے کہا ہے کہ میری جان کو شدید خطرات لاحق ہیں اور عالمی سطح پر مجھ پر جھوٹے الزامات لگائے جارہے ہیں لیکن کسی بھی بین الاقوامی طاقت کے آگے سر نہیں جھکاؤں گا۔

لندن سے جاری بیان میں متحدہ قومی موومنٹ کے قائد الطاف حسین نے کہا ہے کہ تحریک کے آغاز سے ہی ان کے اور ان کے مقصد کے خلاف سازشیں شروع کردی گئی تھیں۔ ان پر طرح طرح کی بہتان تراشیاں اور من گھڑت الزامات لگا کر بدنام کرنے کی سازشیں کی گئیں لیکن انہوں نے پاکستان میں باطل قوتوں کے آگے سرنہیں جھکایا، قید وبند کی صعوبتیں برداشت کرتے ہوئےاپنے مشن کو جاری رکھا۔ ان کا کہنا تھا کہ سازشوں کا سلسلہ اب بھی جاری ہے اور بین الاقوامی سطح پرمجھ پر طرح طرح کے جھوٹے الزامات لگائے جارہے ہیں ۔ ان کے خلاف بین الاقوامی سطح پر نہ صرف منفی پروپیگنڈے کئے جارہے ہیں بلکہ جھوٹے الزامات کے تحت مقدمات بنانے کی سازش کا مضبوط جال بھی بچھایا گیا ہے لیکن وہ کسی بین الاقوامی طاقت کے آگے سرنہیں جھکائیں گے۔ ان کا سر صرف اللہ تعالیٰ کے آگے جھکا ہے اور مرنے کے بعد بھی صرف اللہ تعالیٰ کے آگے ہی جھکے گا۔

الطاف حسین نے کہاکہ اگر ان کی زندگی کو کوئی بھی نقصان پہنچے تو کارکن ان کے پڑھائے ہوئے سبق کو ہرگز نہ بھولیں اور کسی بھی قیمت پر مقصد اور تحریک کو باطل قوتوں کی سازشوں کے آگے ختم کردینے کے بجائے اسے زندہ رکھنے کے لئے جو قربانیاں دی جاسکیں وہ دیں اور منزل کے حصول تک ان کے سبق کو یاد رکھیں۔  انہوں نے کہا کہ رابطہ کمیٹی ، منتخب نمائندوں اور ملک بھر کے چھوٹے بڑے تمام ذمہ داران اور کارکنان ان کے اس بیان کا انتہائی سنجیدگی سے نوٹس لیں اور ان کی بتائی ہوئی باتوں پر عمل کریں۔ تمام ذمہ داران اپنے فرائض منصبی کو پہچانتے ہوئے ان پر عمل کریں اور کسی بھی قسم کی غفلت کا مظاہرہ نہ کریں۔