|

وقتِ اشاعت :   February 13 – 2018

کوئٹہ: بلوچستان نیشنل پارٹی کے مرکزی رہنماء سابقہ سینیٹر نوابزادہ میر حاجی لشکری خان رئیسانی نے معروف قانون دان اور انسانی حقوق کی سرگرم کارکن عاصمہ جہانگیر کے انتقال پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ عاصمہ جہانگیر ناانصافیوں کی چکی تلے پسے عوام کے لیے امید کی آخری کرن تھیں۔

ان کے انتقال سے محکوم اور مظلوم عوام کیلئے اٹھنے والی آواز خاموش ہوگئی ہے۔بے باک،نڈر،بہادر اور اصول پسند شخصیت کی مالک عاصمہ جہانگیر بلوچستان میں بلوچ لاپتہ افراد اور انسانی حقوق کی پامالی کے حوالے ہر فورم پر متحرک رہیں۔عاصمہ جہانگیر نے پوری زندگی عدل وانصاف کے قیام اور قانون کی حکمرانی کے لئے وقف کررکھی تھی۔

عاصمہ جہانگیر نے ایک بیٹی،ماں،قانون دان اور جمہوریت پر کامل یقین رکھنے والے فرد کے طور پر پاکستان کی عدالتی اور سیاسی تاریخ پر ان مٹ نقوش چھوڑے ہیں۔

آمریت کے خلاف اور جمہوریت کے حق میں ان کی کاوشیں اور قانون کی بالادستی ، ماورائے آئین اقدامات کیخلاف انکی جدوجہد بلوچستان کے محکوم و مظلوم اقوام کیلئے ناقابل فراموش ہیں۔

انکے انتقال سے دنیا ایک عظیم انسانی حقوق کے علمبردار سے محروم ہو گئی ہے اور پسے ہوئے طبقات کے لئے عاصمہ جہانگیر کی خدمات کو ہمیشہ یاد رکھا جائیگا۔ اہل بلوچستان کی ہمدردیاں انکے خاندان کے ساتھ ہیں۔