|

وقتِ اشاعت :  

راولپنڈی: آئی ایس پی آر کے مطابق آرمی چیف جنرل نے سینٹرل کمانڈ ہیڈ کوارٹرز کھاریاں کا دورہ کیا اور جہلم میں پاک فوج کے نشانہ بازی کے مقابلوں کے اختتامی سیشن کا معائنہ کیا۔ نوجوانوں سے خطاب میں آرمی چیف کا کہنا تھا پاک فوج عظیم ادارہ ہے اپنی شاندار کارکردگی، ذمہ داریوں اور کردار سے ادارے کی ساکھ برقرار رکھیں گے۔ ذرائع کے مطابق اس موقع پر آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سے فوجی افسروں نے کئی سوالات کئے۔ افسران نے فوجی عدالتوں سے متعلق رانا ثناء اللہ کا بیان اور ڈان لیکس پر سوال اٹھائے۔ افسران نے کہا ڈان لیکس کی تحقیقات اب تک مکمل نہیں ہو سکیں۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ افسران نے آرمی چیف سے شکوہ کیا کہ وزیر قانون پنجاب رانا ثنااللہ نے فوجی عدالتوں کی کارکردگی غیر تسلی بخش قرار دی۔ آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے فوجی افسران کے سوالوں کے تفصیلی جوابات دیئے،علاوہ ازیںآرمی چیف جنرل قمرجاوید باجوہ نے کہا ہے کہ پاک فوج کی ساکھ فرائض کی ادائیگی اور کردار سے برقرار رکھیں گے،پاک فوج عظیم ادارہ ہے۔آئی ایس پی آر کے مطابق آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے جمعرات کے روز سینٹرل کمانڈ ہیڈ کوارٹر کا دورہ کیا جہاں انہیں آپریشنل تیاریوں پر تفصیلی بریفنگ دی گئی،آرمی چیف نے جہلم اور کھاریاں کینٹ کا بھی دورہ کیا اور جہلم میں پارا رینج میں فائرنگ مقابلوں کا معائنہ کیا،اس موقع پر آرمی چیف نے ضرب عضب میں حصہ لینے والے افسران اور جوانوں کی خدمات کو سراہا اور کہا کہ پاک فوج ایک عظیم ادارہ ہے،ادارے کی عزت کے لئے ہمیں بے لوث خدمات سرانجام دینا ہوں گی،ہم اپنے کردار اور فرائض کی ادائیگی سے پاک فوج کی ساکھ برقرار رکھیں گے۔انہوں نے کہا کہ عالمی مقابلوں میں ہماری ٹیمیں اپنا لوہا منوانے کے لئے ملک کی نمائندگی کریں۔