|

وقتِ اشاعت :  

کوئٹہ: سبی کے علاقہ تلی میں نامعلوم افراد کی فائرنگ سے پولیس اہلکار جاں بحق، لہڑی اور نصیر آباد کے قریب بارودی سرنگ دھماکوں میں چار افراد زخمی ہوگئے، کوہلو میں سیکورٹی فورسز سے فائرنگ کے تبادلے میں ایک شخص جاں بحق ہوگیا، تفصیلات کے مطابق سبی پولیس میں بطور ڈرائیور خدمات سرانجام دینے والے شفیع محمد ولد فیض محمد کو نامعلوم افراد نے جدید اسلحہ سے فائرنگ کرکے تلی کے قریب قتل کردیا اور موقع سے فرار ہونے میں کامیاب ہوگئے واقعہ کی اطلاع ملتے ہی سبی پولیس کی بھاری نفری موقع پر پہنچ کر تفتیش شروع کردی لاش کو پوسٹمارٹم کیلئے سول ہسپتال سبی لے جایا گیا جہاں پر ضروری کاروائی کے بعد قتل ہونے والے شخص کی لاش کو ورثاء کے حوالے کردیا گیا، ضلع لہڑی میں ماہی واہ کے قریب لہڑی بختیار آباد کے کچے راستے پر نامعلوم افراد کی جانب سے بچھائی گئی بارودی سرنگ سے موٹر سائیکل ٹکرا گئی جس سے زوردار دھماکا ہوا۔ دھماکے میں موٹر سائیکل سوار سکندر، اس کی بھابھی کریمہ، دو سالہ بھتیجی ذولیخا اور ایک سالہ بھتیجا اختر زخمی ہوگئے۔ زخمیوں کی حالت تشویشناک بتائی جاتی ہیں جنہیں سبی منتقل کردیا گیا۔ ادھر نصیرآباد کی تحصیل چھتر میں غلام حیدر جھکرانی کے ٹیوب ویل کے قریب ٹرک بارودی سرنگ سے ٹکرانے کے باعث دھماکا ہوا۔ واقعہ میں ٹرک کو جزوی نقصآن پہنچا تاہم کوئی جانی نقصان نہیں ہوا،کوہلو کے علاقہ جنت علی میں حساس اداروں و سیکورٹی فورسزنے مشتبہ افراد کی موجود گی پر سرچ آپریشن کررہے تھے کہ سیکورٹی فورسز کو دیکھتے ہی مشتبہ افراد نے جدید اسلحہ سے فائرنگ شروع کردی فورسز کی جانب سے جوابی فائرنگ میں ایک مشتبہ شخص جان بحق جبکہ19 گرفتار کرلئے گئے جن کو خفیہ مقام پر منتقل کردیا گیا گرفتار افراد سے4 ایس ایم جی 2دعد بندوقیں اور 6موٹر سائیکلیں برآمد کر لی گئیں ہیں اس سلسلے میں مزید تحقیقات مقامی انتظامیہ نے شروع کردی۔